اسرائیلی مظالم کے خلاف چار فلسطینی قیدیوں کی بھوک ہڑتال

اسرائیلی جیلروں کی طرف سے قیدیوں سے ناروا سلوک اور انسانی حقوق کی پامالیوں کے خلاف چار فلسطینی قیدیوں نے بھوک ہڑتال جاری رکھی ہوئی ہے۔

فاران: سنہ1948ء کے مقبوضہ فلسطینی علاقوں سے تعلق رکھنے والے فکری منصور کی بھوک ہڑتال کو آج 13 دن ہو چکے ہیں۔ فکری منصور ایالون جیل میں فوج داری مقدمات کا سامنا کرنے والے قیدیوں میں شامل ہیں۔

قابض فوج نے فکری منصور کو سنہ 2005ء میں گرفتار کیا تھا اور انہیں 17 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی۔ فکری کو دوسری تحریک انتفاضہ کے دوران فدائی حملہ آور جو الخضیرہ مارکیٹ تک پہنچانے میں مدد فراہم کرنے کا الزام عاید کیا تھا۔

قید کی مدت ختم ہونے کے باوجود صہیونی حکام فکری کو رہا کرنے میں ٹال مٹول سے کام لے رہے ہیں۔

بھوک ہڑتال کرنے والے دوسرے قید معتز عبید ہیں جنہوں نے 22 دن سے علاج کی سہولت نہ ملنےکےخلاف بھوک ہڑتال جاری رکھی ہوئی ہے۔

انتظامی قید کے خلاف احتجا کرنے والوں میں اسیر خلیل عواودہ اور راید ریان ہیں۔عواودہ کی بھوک ہڑتال 133 ویں دن میں جاری ہے۔