اسرائیل کی دمشق پر بمباری میں تین شامی فوجی جاں بحق

اسرائیل نے ایک فضائی حملے کے دوران شام کے فوجی ٹھکانوں کو نشانہ بنایا ہے، جس میں تین شامی فوجیوں کے ہلاک ہونے کی اطلاعات ہیں۔

فاران: یہ حملے جمعہ کے روز صبح سویرے کیے گئے ہیں۔ یہ بات سرحدی علاقوں کی جنگ کو مانیٹر کرنے والے ایک ادارے نے بتائی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ دھماکے دمشق اور اس کے سرحدی علاقے میں سنے گئے۔

شام میں قائم اس آبزرویٹری کے مطابق شام نے بھی اسرائیلی حملے کا توڑ کرنے کے لیے اپنی فضائیہ کو متحرک کر دیا ۔ شامی حکومت کے حامی میڈیا کا کہنا ہے کہ دشمن کے حملے کو روکا گیا۔

واضح رہے 2011 سے شروع ہونے والی خانہ جنگی کے بعد سے اب تک اسرائیلی فضائیہ اپنے ہمسائے شام پر سینکڑوں حملے کر چکی ہے۔ اس کا کہنا ہے کہ اس کے اہداف میں شامی فوجی ٹھکانوں اور حزب اللہ کے جنگجووں کو نشانہ بنانا ہے۔

اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ یہ حملے ایران کو اپنی دہلیز پر آنے سے روکنے کے لیے بہت ضروری ہیں۔ پچھلے ماہ اسرائیلی فضائیہ نے اس طرح کے ایک حملے میں دمشق کے ائرپورٹ کو نشانہ بنایا تھا ۔ جس کے نتیجے میں کئی ہفتے تک دمشق ائیر پورٹ کا رن وے قابل استعمال نہیں رہا تھا۔