سعودی عرب کی فضائی حدود کھولے جانے پر اسرائیل میں جشن

ایک بیان میں اسرائیلی وزیر اعظم یائرلپیڈ نے کہا کہ میں سعودی قیادت کو فضائی حدود کھولنے پر مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ یہ پہلا قدم ہے اور ہم اسرائیلی معیشت، اسرائیل کی سلامتی، شہریوں کے مفاد میں کام جاری رکھیں گے۔

فاران: سعودی عرب کی طرف سے اپنی فضائی حدود اسرائیلی طیاروں کی آمدو رفت کے لیے کھولنے کے فیصلے پرصہیونی ریاست میں جشن منایا جا رہا ہے۔

ایک بیان میں اسرائیلی وزیر اعظم یائرلپیڈ نے کہا کہ میں سعودی قیادت کو فضائی حدود کھولنے پر مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ یہ پہلا قدم ہے اور ہم اسرائیلی معیشت، اسرائیل کی سلامتی، شہریوں کے مفاد میں کام جاری رکھیں گے۔

انہوں نے انکشاف کیا کہ ایک طویل اور خفیہ راستے اور سعودی عرب اور امریکا کے ساتھ مسلسل سفارت کاری کے بعد ہم آج صبح ایک خوشخبری لے کرآئے ہیں۔ اس خوش خبری سے قبل امریکا اور سعودی عرب نے القدس اعلامیہ جاری کیا جس میں ابراہیمی معاہدوں کے تحت اسرائیل کو تسلیم کرنے کے دائرے کو وسعت دینے اور ایران کے جوہری پروگرام کا مقابلہ کرنے پر اتفاق کیا گیا۔

اسرائیلی وزیر خزانہ ایویگڈور لیبرمین نے کہا ہے کہ سعودی عرب کا اعلان اسرائیلی ہوابازی کے لیے اپنی فضائی حدود کھولنے کا عملی اظہار ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مشرق وسطیٰ کے لیے ایک نئی مشترکہ منڈی بنانے کے عمل میں یہ پیش رفت اہم قدم ثابت ہوگی۔