کل 1963 آج 4
  • مطابق با: Monday - 15 - August - 2022
  • بایگانی‌های اسلامی مناسبتیں - فاران

    واقعہ کربلا؛ کیا امام حسین (علیہ السلام) کو شیعہ کوفیوں نے شہید کیا؟

    واقعہ کربلا؛ کیا امام حسین (علیہ السلام) کو شیعہ کوفیوں نے شہید کیا؟

    کیا کربلا کے واقعے کے اصل بانی کوفی تھے؟ کیا شیعہ امام حسین (علیہ السلام) کے قتل میں شریک تھے جیسا کہ بنی امیہ کے فکری احفاد دعویٰ کرتے ہیں؟

    عوامل و اسباب عزت اور شاہراہ حسینیت

    عوامل و اسباب عزت اور شاہراہ حسینیت

    عزت کو گوہر نایاب کے طور پر بھی بیان کیا گیا ہے کہ یہ ہر جگہ ہاتھ نہیں آتی اور وہیں ملتی ہے جہاں انسان بندگی کی حدوں کو نہیں لانگتا اور حدود بندگی کی پاسداری و نگہداشت آسان نہیں ہے چنانچہ  صاحب تفسیر المیزان علامہ طباطبائی لکھتے ہیں کہ کلمۂ عزت، نایابی کے مفہوم کو بیان کرتا ہے لہذا جب کہا جاتا ہے کہ فلاں چیز عزیز ہے تو اس کا مطلب یہ ہوتا ہے کہ اس تک آسانی سے رسائی ممکن نہیں ہے

    قیس بن مسہر صیداوی اسدی
    جانثاران حسین علیہ السلام۔ ۲

    قیس بن مسہر صیداوی اسدی

    ابن زیاد کے حکم کے مطابق قیس کے ہاتھوں کو پشت سے  باندھ کر دار الامارہ کی بلندی پر لے جایا گیا اور جلاد نے بلندی سے قیس کو  گرا دیا  جس سے آپ کی بدن کی ہڈیاں ٹوٹ گئیں اور آپ نے جان جان آفریں کے سپرد کی  یقینا جناب مسلم کی طرح گرتے گرتے قیس نے آواز دی ہوگی السلام علیک یا ابا عبد اللہ الحسین ۔

    کربلا اور اسکی انقلاب آفرینیاں

    کربلا اور اسکی انقلاب آفرینیاں

    آج ہماری ایک بڑی مشکل یہ ہوگئی ہے کہ ہمارے درمیان ایسے ضمیر فروش لوگ گھس آئے ہیں جو نہ فکر حسینیت سے آشنا ہیں نہ ہی انہیں کربلا کی آفاقیت کا علم ہے اور نہ امام حسین ع کی قربانیوں کی عظمت کو وہ سمجھتے ہیں۔

    کربلا حادثہ نہیں احیائے انسانیت اور تحفظ دین ہے

    کربلا حادثہ نہیں احیائے انسانیت اور تحفظ دین ہے

    پس وقت کا تقاضا ہے کہ امت مسلمہ کربلا کے ایک ایک کردار کو اپنا رول ماڈل بنائیں ۔عزاداری کے ساتھ ساتھ ان کی سیرت کو بھی اپنائیں تاکہ آج جوعالمی طاغوت کے ساتھ جگہ جگہ پر معرکے بپا ہیں ان کو بآسانی سے سر کرلیا جائے۔جب تک کربلا کے جانبازوں کے کردار ،افکار اور نظریات کو ہم اپنے معاشرے میں نافذ نہیں کریں گے تب تک کربلا کے اصل ہدف اور مقصد کو حاصل نہیں کیا جاسکتا۔

    حسین آئے اس لئے کہ کہیں آفتاب پرست قبلہ نما نہ بن بیٹھیں

    حسین آئے اس لئے کہ کہیں آفتاب پرست قبلہ نما نہ بن بیٹھیں

    حسین (علیہ السلام) نے آسان راستہ منتخب نہیں کیا، بلکہ مشکل ترین راستہ انتخاب کیا، اپنے لئے نہیں بلکہ آزادی، انسان کی شرافت و حقیقت، انسان ہونے، انسان رہنے اور انسان کی صورت میں ہی جانے کے لئے۔

    این این ہانی ابن عروہ
    جانثاران حسین علیہ السلام۔ ۱

    این این ہانی ابن عروہ

    جب لوگ اپنے ایمان کی بولی لگا رہے تھے تو یہ عاشق حسین آواز دے رہا تھا عشق حسین نے مجھے اتنی طاقت دے دی ہے کہ جس ظالم سے پورا کوفہ تھر تھر کانپ رہا ہے میں اسکے سامنے اسکے اشارے پر ایک پیر بھی اٹھا کر رکھنے کو تیار نہیں ہوں ، جہاں ہوں حسینت کے ساتھ ہوں اور ڈٹا رہوں گا میرا نام میرا اعتبار میری خاندانی وجاہت سب حسین پر قربان ۔

    حسینؑ، شہید انسانی

    حسینؑ، شہید انسانی

    حقیقت یہ ہے کہ یزید کو نماز روزہ اور حج سے کوئی مسئلہ نہیں تھا بلکہ اُسے اس نظام سے مسئلہ تھا، جو رسول لے کر آئے تھے اور نظامِ رسالت بنیادی طور پر ان اصولوں پر مشتمل تھا، جس کی اساس تہذیب پرستی اور افضلیت بشر تھی۔

    ایام عزا کے فانوس میں توحیدی تصور حیات کی شمع جلانے کی ضرورت

    ایام عزا کے فانوس میں توحیدی تصور حیات کی شمع جلانے کی ضرورت

    امام حسین علیہ السلام کو صرف اپنی فکر نہ تھی بلکہ سماج و معاشرے کی تڑپ آپکے دل میں تھی آ پ دیکھ رہے تھے توحیدی راستے سے ہٹ جانے والا یہ سماج کس قدر پستی کی طرف جا رہا ہے لہذا آپ نے دوبارہ اسے اپنی منزل پر لانے کے لئے قیام فرمایا یہ عزاداری اسی قیام کربلا کا تسلسل ہے ہم سب کے لئے لازم ہے کہ اسے بھرپور انداز میں زور و شور کے ساتھ منائیں اور کوشش کریں کہ اس کے سایے میں توحیدی تصور حیات واضح ہو سکے انشا ء اللہ۔

    اوپر جاؤ